30

سعودی عرب کا غیرملکی مزدوروں کے بارے میں خطرناک فیصلہ

ریاض : سعودی عرب نے ملک میں بے روزگاری کے خاتمے کے پیش نظر غیر ملکی مزدوروں میں کمی کا فیصلہ کیا ہے.تفصیلات کے مطابق، سعودی حکومت نے آئندہ کا لائحہ عمل طے کرتے ہوئے مقامی ملازمتوں کے لیے غیرملکی افراد پرپابندی لگانے پربھی غور شروع کردیا ہے اور بے روزگاری کے خاتمے کے لیے مقامی کمپنیوں کو سعودی شہریوں کو بھرتی کرنے کا پابند بنایا جائے گا،سعودی عرب کی نئی معاشی پالیسی سے 2020 تک سعودی شہریوں کی بےروزگاری کی شرح میں 12.1 فی صد سے 9 فی صد کمی ہوگی۔سعودی وزارت محنت کے متعارف کردہ نطاقات کے مطابق جو کمپنیاں 100 فیصد سعودی ملازمین بھرتی کریں گی، انکو ایکسیلانٹ ریٹ کیا جائے گا، جبکہ 90 فیصد سعودی ملازمین سے کام چلانے والی کمپنیاں کو گرین، اس طرح تمام کمپنیوں کو 16 کیٹیگریز میں تقسیم کیا جائے گا، جبکہ ذیل میں آنے والی کمپنیاں کو لال رنگ دیا جائے گا، اور وہ خطرے شمار کی جائیں گی۔

Print Friendly, PDF & Email

اپنا تبصرہ بھیجیں