34

وزارت عظمیٰ کیلئے 6 امیدواروں کے کاغذاتِ نامزدگی جمع

اسلام آباد(نیوزڈیسک ) وزیر اعظم کے عہدے کے لیے اپوزیشن جماعتیں کسی ایک امیدوار پر متفق نہ ہوسکیں جس کی وجہ سے اب اس منصب کے 6 امیدوار میدان میں آگئے ہیں جن میں جماعت اسلامی کے رہنما صاحبزادہ طارق اللہ بھی شامل ہیں ۔تفصیلات کے مطابق پارلیمنٹ میں موجود اپوزیشن جماعتیں مسلم لیگ (ن) کے مد مقابل اپنا کوئی متفقہ امیدوار سامنے لانے میں ناکام ہوگئی ہیں، جس کے بعد شاہد خاقانعباسی کے مقابلے میں اپوزیشن کے 5 امیدواروں نے اپنے کاغذات نامزدگی جمع کرادیئے ہیں۔جماعت اسلامی کے صاحب زادہ طارق اللہ نے بھی کاغذات نامزدگی جمع کرائے۔ واضح رہے کہ جماعت اسلامی خیبر پختون خواہ میں پاکستان تحریک انصاف کی اتحادی ہے جس کے باوجود بھی جماعت اسلامی نے پی ٹی آئی کی جانب سے نامزد کیے جانے والے وزیراعظم کے امیدوار شیخ رشید کی حمایت نہ کرنے کا فیصلہ کیا ۔عوامی مسلم لیگ کے سربراہ شیخ رشید نے اپنے تجویز کنندہ شاہ محمود قریشی کے ہمراہ کاغذات نامزدگی جمع کرادئے۔ انہیں تحریک انصاف کے علاوہ مسلم لیگ (ق) کی بھی حمایت حاصل ہے، پیپلز پارٹی کی جانب سے خورشید شاہ اورسید نوید قمر نے وزارت عظمیٰ کے لیے کاغذات نامزدگی جمع کرائے، جب کہ قومی اسمبلی میں حزب اختلاف کی تیسری بڑی سیاسی جماعت ایم کیو ایم کی جانب سے کشور زہرہ نے کاغذات نامزدگی جمع کرائے ہیں۔جانچ پڑتال کے بعد اسپیکر قومی اسمبلی سردار ایاز صادق نے تمام امیدواروں کے کاغذات نامزدگی منظور کرلیے۔ وزیر اعظم کے عہدے کے لیے اپوزیشن جماعتیں کسی ایک امیدوار پر متفق نہ ہوسکیں جس کی وجہ سے اب اس منصب کے 6 امیدوار میدان میں آگئے ہیں جن میں جماعت اسلامی کے رہنما صاحبزادہ طارق اللہ بھی شامل ہیں ۔

Print Friendly, PDF & Email