تازہ ترین
Home >> تازہ ترین >> اس سال ہرچترالی کم از کم ایک پودا لگا کر اسکو کا میاب کر یں تاکہ چترال ماحولیاتی الودگی سے بچیں۔خطیب شاہی مسجد چترال خلیق الزمان

اس سال ہرچترالی کم از کم ایک پودا لگا کر اسکو کا میاب کر یں تاکہ چترال ماحولیاتی الودگی سے بچیں۔خطیب شاہی مسجد چترال خلیق الزمان

چترال(نمائندہ  )اسلام نے جو نظام عبادت اور سنت کے تعلیمات بنی نو ع انسان کو دی ہے ۔اگر آدمی اُسے مکمل طور پر اپنا ئے تو اُخر وی سعادتوں کو امین بننے کے ساتھ ساتھ اُسے دنیا کی خیرو برکت نصیب ہوتی ہے یہ بات خطیب شاہی مسجد چترال (مولانا ) خلیق الزمان نے نماز جمعہ کے اجتماع سے خطاب کر تے ہوئے کہا ۔انہوں نے کہا اللہ سبحا نہ و تعالیٰ کے طرف سے خاتم الا نبیا ء محمد ؐ پر نازل کر دہ دین بر حق ہے جس سے ہر مسلمان کی دنیا و آخرت درست ہوجاتی ہے ۔اور وہ کام جسے ہم دنیا وی کام سمجھتے ہیں وہ بھی اعمال صالحہ کے شکل اختیار کر جاتے ہیں ۔انہی کاموں میں زمین کو آباد کر نا سر سبز و شاداب بنا نا اس پر پودے لگا نا کھیتی باڑی کرنا اسے استعمال میں لانا زمین میں شجر کاری کرنا داخل ہے جو بظاہر دنیا وی کا م نظر آتے ہیں لیکن حقیقت میں وہ بھی دین ہے اسلام اور ایمان کا حصہ ہے عمل پر ثواب ملتا ہے اُنہوں نے کہاکہ حضورؐ نے فرمایا ہے جس کے مردہ زمین کو آباد کیا تو اُسے اسکا ثواب ملے گا ۔ جو اس نے کھا یا اسکو بھی اسکا ثواب ملے گا جو مسلمان کوئی پودا لگا ئے اور اس پودے سے کوئی انسان یا جانور کھا ئے تو لگا نے والے کو اس کا اجر وثواب ملے گا پودا لگا نا صدقہ جاریہ ہے۔
ماحول کو صاف رکھنے کیلئے عوام اور خلوفت دونوں کی ذمہ داری ہے کہ وہ شجر کاری کریں پودے لگا نا حضور ؐ سے ثابت ہے راستے سے سایہ دار درخت کو کاٹنا بھی ممنو ع ہے جنگلات کے بے دریغ کٹائی بھی ممنو ع ہے ماحولیا تی تو ازن کوبرقر ار رکھنے کیلئے 25% حصے میں جنگلات کا ہونا بہت ضرور ی ہے انہوں نے چترال کے عوام سے اپیل کی کہ چترال سے جنگلات کا خاتمہ ہو رہا ہے ۔ان جنگلات کی حفاظت کریں اور متبادل پودے لگا نے کا خصوصی اہتمام کریں ۔اُنہوں نے اپیل کی کہ امسال ہر ایک چترالی کم از کم ایک پودا لگا کر اسکو کا میاب کر یں تاکہ چترال ماحولیاتی الودگی سے بچیں۔انہوں نے کہا کہ دہشت گردی کے حوالے سے تمام اقوام اور سر براہاں پریشان ہیں جس سے انسا نیت کو نقصان ہو رہا ہے ۔بڑھتی ہوئی ماحولیاتی الودگی کے نتیجے میں ہونے والے اموات کے حوالے سے کوئی پریشان نہیں ہے 2015 ؁ء کے ایک سروے کے مطابق دنیا بھر میں الودگی سے ہلاک ہونے والوں کے تعداد 90 لاکھ سے بھی زیادہ ہے ہارٹ اٹیک / بلڈپریشر فالج ، شوگر وغیر ہ تمام بیماریاں ماحولیاتی الودگی کی وجہ سے ہورہے ہیں انہوں نے محکمہ صحت سے بھی اپیل کی ہے کہ وہ اس حوالے سے مثبت قدم اُٹھا ئیں ۔


error: Content is protected !!