تازہ ترین
Home >> تازہ ترین >> پی پی کے منشورمیں خواتین کی خود مختاری ، نوجوانوں کو تعلیم اور روزگار کی فراہمی دیگر بنیادی اجزا شامل ہیں؍سابق ایم پی اسردارحسین شاہ

پی پی کے منشورمیں خواتین کی خود مختاری ، نوجوانوں کو تعلیم اور روزگار کی فراہمی دیگر بنیادی اجزا شامل ہیں؍سابق ایم پی اسردارحسین شاہ

چترال(ڈیلی چترال نیوز)پاکستان پیپلزپارٹی این اے ون چترال کے نامزداُمیدوارسیلم خان ،پی کے ون کے حاجی غلام محمداورسابق ایم پی اے سیدسردارحسین شاہ نے بشقرربالا،بگوشٹ،منوراوراورک گرم چشمہ میں عوامی اجتماعات سے خطاب کرتے ہوئے کہاکہ اگلے عام انتخابات میں پاکستان پیپلزپارٹی واصح قوت بن کرابھری گی، ووٹ امانت اور گواہی کانام ہے لہذا عوام کا فرض ہے کہ وہ امانت داروں کو کامیاب کرکے اس ملک کوترقی کی راہ میں کامزان کریں۔انہوں نے کہاکہ پاکستان پیپلزپارٹی نے ہمیشہ پسے ہوئے اورمظلوم طبقے کے حقوق کے لئے آوازکوبلندکیاہے ۔یہی وجہ ہے کہ پی پی مزدوروں اورغریبوں کی آوازبن گئی ہے اورعوام کوہی طاقت کااصل سرچشمہ سمجھتی ہے ۔شہیدذوالفقارعلی بھٹونے گرم چشمہ آکرعوام میں پائی جانے والی مایوسیوں کوختم کیااورپسماندگی دورکرنے کے لئے چترال میں ریکارڈترقیاتی کام کیے۔جن کی مثال نہیں ملتی۔انہوں نے کہاکہ وادی گرم چشمہ کے عوام بھٹوخاندان سے آج بھی والہانہ محبت کرتے ہیںآنے والے الیکشن میں انشاء اللہ پیپلزپارٹی دونوں سیٹوں سے جیت کرعوامی خدمت کاسلسلہ جہاں رکاتھاوہی سے شروع کرے گی۔انہوں نے کہاکہ پی پی پی کے مزکری منشورکاباقاعدہ اعلان ہوچکاہے جس میں معاشی انصاف، غربت میں کمی، تعلیم اور بنیادی صحت، معذور افراد کو معاشرے کا حصہ بنانا، زرعی اصلاحات، خواتین کی خود مختاری اور نوجوانوں کو تعلیم اور روزگار کی فراہمی دیگر بنیادی اجزا شامل ہیں۔بلاول بھٹو زرداری نے کہا ہے کہ ملکی ادارے بھی باہمی تصادم کا شکار ہیں، چار سال تک یہ ملک بغیر وزیر خارجہ کے چلتا رہا، پارلیمنٹ کو تمام معاملات سے بے خبر رکھا گیا، ن لیگ دورمیں نیشنل ایکشن پلان کو غیر فعال بنا دیا گیا، عوام کو سستی بجلی ملی نہ سستا پیٹرول ملا۔پاکستان زرعی ملک ہے، 40 فی صد آبادی اس سے منسلک ہے، ملک میں 150 سے زائد ٹیکسٹائل یونٹ کم ہوچکے ہیں، انڈسٹریل گروتھ بڑھانے کے لیے اقدامات کریں گے، زرعی اصلاحات کا انقلابی پروگرام ہمارے منشور میں شامل ہے، کسانوں کو بے نظیر کسان کارڈ دیا جائے گا، کارڈ سے کسانوں کو سبسڈی، سستی کھاد ملے گی، محنت کشوں کا تحفظ کیاجائے گا۔انہوں نے کہاکہ منشورکے مطابق عوام کے تحفظ کے لیے مزید ڈیم بنائے جائیں گے، پانی کی بچت محفوظ مستقبل کی ضمانت ہے، غذائی قلت کے سنگین مسئلے کے حل کے لیے پیپلز فوڈ کارڈ متعارف کرائیں گے جس سے عوام کو کھانے کی اشیا کم قیمت پر مل سکیں گی۔ پاکستان میں پہلی بار فیملی ہیلتھ سروس کا آغاز کیا جائے گا، شہروں میں بھی سرکاری ڈسپنسریاں کھولی جائیں گی۔اس موقع پرپی پی پی علماء ونگ کے صدرممتازعالم دین قاری نظام الدین،ممبرتحصیل کونسل گرم چشمہ خوش محمد،فیض الرحمن وی سی ناظم ایون،خداپناہ،محمدامین ،سیدنادرشاہ صدرپی پی پی گرم چشمہ اوردیگرنے خطاب کئے۔


error: Content is protected !!