81

اے پی ایس کے معصوم شہدا نے قربانی کی وہ مثال قائم کی ہے ۔ جو رہتی دنیا تک زندہ گا۔ کمانڈنٹ چترال سکاؤٹس کرنل نظام الدین شاہ

چترال ( محکم الدین محکم)آرمی پبلک سکول پشاور کے شہدا کی یاد میں ایک پُر وقار تقریب فرنٹیر پبلک سکول چترال میں منعقد ہوئی ۔ کمانڈنٹ چترال سکاؤٹس کرنل نظام الدین شا ہ مہمان خصوصی تھے ۔ چترال سکاؤٹس کے آفیسران ، سول سوسائٹی کے نمایندگان اور طلباء و طالبات کے والدین کی بڑی تعداد موجود تھی۔ اس موقع پر طلباء و طالبات نے اے پی ایس پشاور کے شہدا ء کی لازوال قربانیوں پر تفصیل سے روشنی ڈالی ۔ اور کہا ۔ کہ اے پی ایس کے معصوم شہدا نے قربانی کی وہ مثال قائم کی ہے ۔ جو رہتی دنیا تک زندہ گا ۔ انہوں نے کہا ۔ کہ اے پی ایس پشاور کا واقعہ یہ پاکستان اور دنیا کی تاریخ کی وہ بد ترین دہشت گردی ہے ۔ جس کے ذ ریعے مکروہ چہروں کے شیطانی نظریے سب پرعیاں ہو چکے ہیں ۔ اور پاکستان کی بہادر قوم نے اپنے دشمنوں کو پہچان لیا ہے ۔ قوم کو اے پی ایس کے معصوم شہیدوں کی قربانیوں پر فخر ہے ۔ اور د ہشت گرد اس قسم کے ظلم اور بربریت کے ا بلیسی کاروائیو ں سے نونہالوں کو خوفزدہ نہیں کر سکتے ۔ تقریب میں ننھے طلبہ نے ملی نغمے پیش کئے ۔ شہدا کے لئے مرثیہ خوانی کی ۔ اور دہشت گردوں کی سرکوبی کیلئے پاک فوج کی کامیا بیوں کی تعریف کی ۔ طلباء نے اے پی ایس پشاور میں دہشت گردوں کی کاروائی سے متعلق خاکے پیش کئے۔اور شہداء کے والدین پر گزرنے والے حالات و واقعات کا تذکرہ کرکے حاضرین کو رُلا دیا ۔ اس موقع پر شہداء کی یاد میں شمعیں روشن کی گئیں ۔ وائس پرنسپل ایف سی پی ایس سید الرحمن نے اپنے خطاب میں کہا ۔ کہ دہشت گردوں نے معصوم طلباء پر جو ظلم کیا ۔ در اصل انہوں نے اپنی موت کو خود دعوت دی ہے ۔وہ کسی بھی طرح رو رعایت کے مستحق نہیں ۔ پاکستان کے عوام اس عظیم قربانی کو کبھی نہیں بھول سکتے ۔ اللہ پاک ایف سی پی ایس پشاور کے طلباء کی قربانیوں کو قبول فرمائے ۔ انہوں نے تمام شرکاء کا شکریہ ادا کیا۔

DSC07750

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں