96

ڈپٹی کمشنر لوئرچترال کو فوراً تبدیل کیا جائے۔۔مولانا شیرکریم شاہ

چترال/ مولانا شیرکریم شاہ امیر جمعیت علماء اسلام اپرچترال نے کہ اہے کہ موجودہ حالات میں چترال کےہرشعبے سے تعلق رکھنے والے تمام افراد کروانا وائرس کی وجہ سے اداروں کے ساتھ بھرپور تعاون کرکے کروانا کا مقابلہ کررہے تھے اور چترال میں لاک ڈاؤن اور دفعہ۔ 144 کو چترالی عوام اور علماء کرام نے کروانا وائرس کے مقابلے اپنے اوپر تکالیف مشکلات اورسختیاں برداشت کرکے کروانا پھیلنے سے پورے چترال کو محفوظ بنایا اور اب تک چترال میں ایک بھی کروانا مریض نہیں لیکن موجودہ ڈپٹی کمشنر نے اپنی نااہلی کا ثبوت دیتے ہوئے لوگوں کا ایک بہت بڑا مجمع پولو گراؤنڈ میں جمع کرکے چترال کے مہذب قوم کو ایک بھکاری بناکر پوری دنیا کے سامنے پیش کیا۔۔اور دفعہ 144 کی دھجیاں اڑائی ۔ایک اخباری بیان میں انھوں نے کہا ہے کہ آئیندہ اگر چترال میں یہ وباء پھیل جائے تو اس کی تمام ذمہ داری موجودہ ڈپٹی کمشنر اور کمشنر ملاکنڈ پر ھوگی۔ اگر موجودہ حکومت اس نااھل ڈپٹی کمشنر کا تبادلہ نہیں کیا تو ھم پورے چترالی عوام کو لیکر کروانا وائرس کا لحاظ کیے بغیر سڑکوں پر آئیں گے جس کی تمام تر ذمہ داری موجودہ حکومت پر ھوگی لہذا موجود ہ ڈپٹی کمشنر کا فوراً تبادلہ کیا جائے

Print Friendly, PDF & Email