33

چترال کے لوگ ڈیزاسٹر سے متاثرہ انفراسٹرکچر کی بحالی میں جس منظم طریقے سے کام کر رہے ہیں۔مہیب الدین اُسامہ

چترال ( نمایندہ ڈیلی چترال ) چترال کے لوگ ڈیزاسٹر سے متاثرہ انفراسٹرکچر کی بحالی میں جس منظم طریقے سے کام کر رہے ہیں ۔ وہ دوسرے لوگوں کیلئے باعث تقلید ہے ۔ ڈیزاسٹر نے چترال خصوصا ایون اور کالاش ویلز کو بہت زیادہ نقصان پہنچایا ہے۔ ان خیا لات کا اظہار یو این ڈی پی کے ڈیزاسٹر منیجمنٹ کے ذمہ دار مہیب الدین اُسامہ نے ایون میں یو این ڈی پی کے مالی تعاون سے ایس آر یس پی کے زیر نگرانی تعمیر ہونے والی نہروں اور حفاظتی پشتوں کا معائنہ کرنے کے موقع پرمقامی لوگوں سے خطاب کرتے ہوئے کیا ۔ DSC05033اس موقع پر چیف ایگزیکٹیو ایس آر ایس پی شہزادہ مسعود الملک ،ڈی پی ایم طارق احمد ، انجینئر خادم اللہ کے علاوہ منتخب نمایندگان اور معززین کی بڑی تعداد موجود تھی ۔ انہوں نے کہا ۔ کہ کمیونٹی جس طرح سیلاب کے بعد بحالی کے کاموں کی تکمیل میں دلچسپی سے کام لے رہی ہے ۔ اسی طرح سیلاب سے بچاؤ کے حوالے سے بھی کمیونٹی کو منصوبہ بندی کرنی چاہیے ۔ تاکہ وسائل بار بار استعمال نہ کرنے پڑیں ۔انہوں نے کہا ۔ کہ میں نے ایس ار ایس پی اور کمیونٹی کے اشتراک سے ہونے والے جو کام دیکھے اُن کو دنیاکے سامنے پیش کروں گا ۔ چیف ایگزیکٹیو ایس آر ایس پی شہزادہ مسعود الملک نے اپنے خطاب میں کہا ۔ کہ آفات نے جو تباہی پھیلائی ہے ۔ اُس کی بحالی کسی ایک ادارے کے ذریعے ممکن نہیں ۔ اس کیلئے مختلف اداروں کی خدمات حاصل کرکے ہی ان مسائل پر قابو پایا جا سکتا ہے ۔ یو این ڈی پی کے ذریعے ایون میں نروں کی بحالی کا کام جاری ہے ۔ سی سی ڈی ایل ڈی کے ذریعے بھی ایک سال کے اندر پینتیس کروڑ روپے تنظیمات کے ذریعے منصوبوں پر خرچ کئے جائیں گے ۔ شہزادہ مسعود نے لوگوں کو ہدایت کی ۔ کہ اپنے اندر اتحاد پیدا کریں ، تنظیمات کو مضبوط بنائیں اور وہ منصوبے تعمیر کریں ۔ جن سے عوام کو حقیقی معنوں میں فائدہ پہنچ رہا ہو ۔ قبل ازین انہوں نے ایون موڑدہ نہر اور درخناندہ نہر کا معائنہ کیا ۔ اور کام کا جائزہ لے کر خوشی کا اظہار کیا ۔ مقامی لوگوں کی طرف سے آصف رضا نے مہمانوں کا شکریہ ادا کیا ۔ اور یواین ڈی پی کے فنڈ سے ایس آر ایس پی کے زیر نگرانی تعمیر ہونے والے منصوبوں کو علاقے کیلئے انتہا ئی سود مند اقدام قرار دیا ۔

Print Friendly, PDF & Email

اپنا تبصرہ بھیجیں