29

چترال ایریا انٹگریٹیڈ پروگرام کے اثاثوں سے متعلق امور کا جائزہ

پشاور/خیبر پختونخوا لوکل گورنمنٹ کمیشن نے صوبے کی ان یونین کونسلوں اور نائبر ہوڈ کونسلوں کو جو اپنے ناظمین کے ہونے کے باوجود ابھی تک بجٹ پاس نہیں کراسکیں کو فوری طورپراپنا بجٹ پاس کرانے کی ہدایت کی ہے۔اس امر کا فیصلہ پشاور میں سینئر صو بائی وزیر بلدیات ودیہی ترقی عنایت اللہ کی سربراہی میں منعقد ہونے والے 27واں لوکل گورنمنٹ کمشین کے اجلاس میں کیا گیا۔ اجلاس میں رکن صوبائی اسمبلی سردار محمد ادریس، سیکرٹری قانون، سیکرٹری بلدیات، ڈاکٹر اقبال خلیل و دیگر متعلقہ افسران نے شرکت کی۔اجلاس میں مختلف امور پر غور و خوض ہوا۔تا ہم اس موقع پریہ فیصلہ بھی کیا گیا کہ ایسی ویلج اور نائبر ہوڈ کونسلیں جن کے ناظمین کے عہدے ابھی تک خالی ہیں ان کو لوکل گورنمنٹ ایکٹ 2013کے تحت فوری طور اپنا بجٹ پاس کرنے اور کسی قسم کی مشکلات کی صورت میں ڈائریکٹر جنرل بلدیات سے رابطہ کرنے کی ہدایت کی۔اجلاس میں چترال ایریا انٹگریٹیڈ پروگرام کے اثاثوں سے متعلق امور کا جائزہ لیتے ہوئے ڈپٹی کمشنر چترال اور ضلعی حکومت کو باہمی مشاورت سے معاملات طے کرانے کی ہدایت کی گئی۔ اجلاس میں تحصیل کونسل رجڑ ضلع صوابی اور تحصیل کونسل پورن کے علاوہ شانگلہ، کرک، بنو ں، سوات اور کوہاٹ کے اضلاع سے متعلق بعض شکایات و مسائل کا جائزہ لیا گیا اور اس سلسلے میں اہم فیصلے کئے گئے۔اس موقع پر اظہار خیال کرتے ہوئے سینئر وزیر نے کہا کہ کمیشن ایک اہم اور خودمختار فورم ہے اور لوکل گورنمنٹ ایکٹ 2013 کیقواعد و ضوابط کے مطابق مفاد عامہ کی بہتری کیلئے منصفانہ فیصلے کررہا ہے۔انہوں نے متعلقہ ویلج اور نبر ہوڈ کونسلوں کو اپنے امور بلا تاخیر بروقت نمٹانے کی ہدایت کی۔

Print Friendly, PDF & Email

اپنا تبصرہ بھیجیں