48

مستوج شندور روڈ کے شاہی داس کے مقام پر دو مہینوں سے پہاڑی تودہ گرنے سے بار بار بندش کی وجہ سے عوام شدید مشکلات میں مبتلا

چترال (نمائندہ ڈیلی چترال) علاقہ لاسپور کے ویلج کونسل ناظمین شیر اعظم خان، مبارک شاہ اور پونار خان نے مستوج شندور روڈ کے شاہی داس کے مقام پر دو مہینوں سے پہاڑی تودہ گرنے سے بار بار بندش کی وجہ سے عوام شدید مشکلات میں مبتلا ہیںاور چترال کا گلگت بلتستان سے رابطہ بھی منقطع ہوتا ہے جس کے مستقل طور پر بحالی کے لئے ہنگامی بنیادوں پر منصوبہ بندی کی ضرورت ہے۔ ایک اخباری بیان میں انہوںنے کہاکہ لاسپور وادی کے تینوں ویلج کونسلوں کے فنڈز سے اس روڈ کو ایک مہینے کے اندر اندر تین دفعہ ٹریفک کے قابل بنایا گیا لیکن کسی بھی وقت دوبارہ بند ہوسکتا ہے جہاں پتھر گرنے کا سلسلہ اب بھی جاری ہے ۔ ان کا کہنا تھاکہ حال ہی میں ایک نوجوان بھی پتھر لگنے سے اس مقام پر جان بحق ہوگئے جبکہ ایک سال کے اندر درجنوں لوگ زخمی ہوگئے ہیں۔ انہوںنے کہاکہ کسی بھی ایمرجنسی اور بیماری کی صورت میں اس وادی کا رابطہ چترال کے دوسرے حصو ں سے منقطع ہونے پر ہیلی کاپٹر سروس کے سوا اور کوئی چار ہ کار نہیں رہے گا۔ ویلج ناظمین نے صوبائی حکومت، ایم این اے، ایم پی اے، ضلع ناظم اور ڈسٹرکٹ انتظامیہ سے اپیل کی ہے کہ علاقہ لاسپور اور دیگر دیہاتوںکے مشکلات اور مجبوریوں کو مدنظر رکھتے ہوئے اس سلائیڈنگ کے مقام پر مستقل انتظام کرکے 36ہزار افراد کو ضلع کے دوسرے حصوں سے منقطع ہونے سے بچایا جائے۔ انہوںنے کہاکہ گشٹ اور رامان گاﺅں سے گزرنے والی سڑک کو بھی دوبارہ استعمال میں لاکر اس کا متبادل بنایا جاسکتا ہے جوکہ انگریزوں کے زمانے میں بھی زیر استعمال رہا تھا۔

Print Friendly, PDF & Email