62

جے یوآئی انفارمیشن سیکرٹری کا ورکشاپ یونین کے رہنماؤں کے ساتھ بداخلاقی سے پیش آنا نہایت قابل مذمت فعل ہے۔ محمد اسحاق

چترال / آل ورکشاپ ایسوسی ایشن ڈسٹرکٹ لویر چترال کے صدر محمد اسحاق نے ایک اخباری بیان میں گزشتہ دنوں جے یو آئی کے زیر اہتمام ختم نبوت کانفرنس کے موقع پراسٹیج پرموجود جے یو آئی کے رہنما قاضی نسیم کی طرف سے اپنے ساتھ بداخلاقی کی شدید مذمت کرتے ہوئے کہا ہے کہ بحیثیت صدر آل ورکشاپ ایسوسی ایشن ڈسٹرکٹ لویر چترال اُنہوں نے جلسے کو کامیاب بنانے کے لئے اہم کردار ادا کیا تھا۔ انہوں نے کہاہے کہ اس کانفرنس کو کامیاب بنانے کے حوالے سے جے یو آئی کی طرف سے 15ستمبر کو ایک مقامی ہوٹل میں جے یو آئی کے رہنماؤں کے ساتھ ایک نشست منعقد ہوا تھا جس میں ایم پی اے مولانا ہدایت الرحمن بھی موجودتھے اور اس اجلاس میں طے شدہ معاہدے کے تحت ورکشاپ سے متعلق افراد کو بڑی تعداد میں پریڈ گراونڈ لانا تھا جسے انہوں نے بخوبی پوراکیا۔ انہوں نے کہاکہ ایم پی اے مولانا ہدایت الرحمن نے ورکشاپ میں کام کرنے والی برادری کے مسائل کو حل کرنے کی یقین دہانی کرائی جس میں پانی کی فراہمی اور صفائی کا نظام بہتر بنانے کے مطالبات شامل تھے۔ انہوں نے اس امید کا اظہارکیا کہ ایم پی اے اپنی شرافت اور علاقے کی ترقی کے لئے دن رات کام کرنے کا جذبہ رکھنے کی بنا ان کے مسائل اپنی اولین فرصت میں پورا کرکے ورکشاپ میں کام کرنے والوں کا دل جیت لے گا۔ انہوں نے کہاکہ پارٹی کے انفارمیشن سیکرٹری کا ورکشاپ یونین کے رہنماؤں کے ساتھ بداخلاقی سے پیش آنا نہایت قبیح اور قابل مذمت فعل ہے جس کی جتنی مذمت کی جائے، کم ہے۔ انہوں نے جے یو آئی کے اعلیٰ قیادت سے مطالبہ کیا ہے کہ عوام کو جمعیت سے بدظن کرنے پر ان کے خلاف تادیبی کاروائی کی جائے۔

Print Friendly, PDF & Email