122

جمعیت علمائے اسلام (ف) کے صد سالہ یوم تاسیس کی تقریبات 7 اپریل سے شروع ہوں گی، امام کعبہ خصوصی دعوت پر تشریف لائیں گے

اسلام آباد/ جمعیت علمائے اسلام (ف) کے صد سالہ یوم تاسیس کی تقریبات 7 اپریل سے شروع ہوں گی جس میں امام کعبہ بھی خصوصی دعوت پر تشریف لائیں گے۔ جمعیت علمائے اسلام (ف) کے ذرائع نے بتایا کہ جمعیت کے قیام کے 100 سال مکمل ہونے پر خصوصی تقریبات کا آغاز 7 اپریل کو اضا خیل پشاور میں ہوگا۔ یہ اجتماع 7 سے 9 اپریل تک جاری رہے گا جس میں پاکستان کے علاوہ دنیا کے مختلف ممالک اور خطوں کے علمائے کرام شرکت کریں گے۔اجتماع میں شرکت کے لئے مختلف ممالک کے علمائے کرام کو دعوت نامے بھجوا دیئے گئے ہیں۔ امام کعبہ شیخ عبدالرحمٰن السدیس جمعہ 7 اپریل کو اجتماع میں نماز جمعہ کی امامت کریں گے تاہم علالت کی وجہ سے وہ شریک نہ ہو سکے تو شیخ صالح الطالب ان کی نمائندگی کریں گے۔ جمعیت علمائے اسلام (ف) کے مرکزی امیر مولانا فضل الرحمان اجتماع کی تیاریوں کے لئے انتظامات کی ذاتی طور پر نگرانی کر رہے ہیں اور مہمانوں کی شرکت کے حوالے سے خاص طور پر خود رابطے کر رہے ہیں۔مولانا فضل الرحمان نے پاکستان مسلم لیگ (ن) اور پاکستان پیپلز پارٹی سمیت سرکردہ سیاسی جماعتوں کے مرکزی رہنمائوں کو اجتماع میں شرکت کی دعوت خود دی ہے اور کئی رہنمائوں نے شرکت کرنے کا عندیہ دیا ہے۔ جمعیت علمائے اسلام (ف) نے مرکزی و صوبائی حکومتوں سے درخواست کی ہے کہ وہ اجتماع کے پرامن انعقاد اور معزز مہمانوں و شرکاء کی سیکورٹی یقینی بنانے کے لئے ہر ممکن اقدامات کریں۔جمعیت علمائے اسلام (ف) کی قیادت نے خیبر پختونخوا حکومت سے بھی رابطہ کیا ہے اور اجتماع کے انتظامات کے سلسلے میں ان سے تعاون کی درخواست کی ہے۔ جمعیت علمائے اسلام (ف) کے اس اجتماع کے لئے ملک بھر میں تیاریاں زور و شور سے جاری ہیں اور توقع کی جا رہی ہے کہ یہ جمعیت کی تاریخ کا ایک بڑا اجتماع ہوگا۔ خیبر پختونخوا میں بھی اجتماع کی تیاریاں عروج پر ہیں اور جے یو آئی کے رہنما اور کارکن اجتماع گاہ میں لاکھوں افراد کی شرکت کو یقینی بنانے کے لئے متحرک ہیں۔

Print Friendly, PDF & Email

اپنا تبصرہ بھیجیں