48

سال 2016 : سی ٹی ڈی کی خیبر پختونخوا میں کاروائیاں

پشاور. انسپکٹر جنرل پولیس خیبر پختونخوا ناصر خان درانی کا کہنا تھاکہ رواں سال دہشتگردی میں کمی آئی ہے۔ محکمہ انسداد دہشتگردی نے اس دوران مختلف کارروائیوں کےدوران 1200 تک دہشتگرد گرفتار کئے ہیں۔ جس میں 120سے زائد ہیڈ منی والے دہشتگرد بھی شامل ہیں۔آئی جی خیبرپختونخوا کا کہنا تھا کہ دیگر کالعدم تنظیمیں نام تبدیل کرکے داعش کے نام سے کاروائیاں کررہے ہیں تاہم داعش کے نام سے کارروائیاں کرنے والے کئی دہشتگرد گرفتار کئے گئے ہیں۔ اس دوران بارودی موادکے 196ریکوریز بھی کئے گئے ہیں۔آئی جی پولیس ناصرخان درانی کا مزید کہنا تھا کہ اس سے قبل سال2014میں دہشتگردی کے485واقعات، 2015میں 207جبکہ رواں سال صرف 190واقعات رونما ہوئے۔

Print Friendly, PDF & Email

اپنا تبصرہ بھیجیں