54

پی آئی اے کا بدقسمت طیارہ کیوں تباہ ہوا؟ اہم ترین رپورٹ آگئی

اسلام آباد(نیوزڈیسک)پاکستان انٹر نیشنل ائیر لائنز (پی آئی اے )کے بد قسمت اے ٹی آر طیارے کا بلیک باکس اور وائس ریکارڈ ڈی کوڈ کر لیا گیا، ابتدائی تحقیقات کے مطابق خرابی انجن میں ہوئی جو حادثے کا سبب بنی۔ نجی نیوز چینل کے مطابق فرانس میں بلیک باکس اور وائس ریکارڈ کو ڈی کوڈ کرکے واپس اسلام آباد پہنچا دیا گیا ہے جہاں اس سے حاصل ہونے والی معلومات کی روشنی میں مزید تحقیقات کی جائیں گی۔ ذرائع کے مطابق ابتدائی تحقیقاتی رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ حادثہ دورانِ پروازانجن میں پیدا ہونے والی فنی خرابی کے سبب پیش آیا ‘ پائلٹ نے پرواز کے دوران کنٹرول ٹاور کو خرابی سے آگاہ بھی کیا۔بلیک باکس اور وائس ریکارڈر ڈی کوڈ ہونے کے بعد سول ایوی ایشن کی تحقیقاتی کمیٹی ،سیفٹی اینڈ انوسٹی گیشن بورڈاور طیارے کی انجن ساز کمپنی نے مفصل تحقیقات کا آغاز کردیا ہے۔یاد رہے کہ رواں ماہ 7دسمبر کو چترال سے اسلام آباد آنے والی پی آئی اے کی پرواز پی کے 661 حویلیاں کے نزدیک حادثے کا شکار ہوکر تباہ ہوگئی تھی۔ طیارے میں کل 47 افراد موجود تھے جو کہ موقع پر ہی جاں بحق ہوگئے تھے۔ جاں بحق ہونے والوں میں معروف نعت خواں جنید جمشید ‘ ان کی اہلیہ اور چترال کے شاہی خاندان کے چشم و چراغ شہزادہ فرہاد بھی اس دارِ فانی سے رخصت ہوگئے تھے۔ فرانس نے حادثے کے بعد پاکستان کو تحقیقات میں معاونت کی پیشکش کی تھی اور چار رکنی ٹیم پاکستان روانہ کی تھی جس نے جائے وقوعہ پر جدید ٹیکنالوجی کی مدد سے تحقیقات کی تھیں۔

Print Friendly, PDF & Email

اپنا تبصرہ بھیجیں