60

اقتدار پر قابض حکمرانوں نے گزشتہ 68سال سے لوٹ مار کا بازار گرم کر رکھا ہے۔سراج الحق

لاہور (نامہ نگار) امیر جماعت اسلامی پاکستان سینیٹر سراج الحق نے ترکی کے صدر طیب اردگان کو مبارک باد دیتے ہوئے کہا کہ ترکی کے عوام نے اپنی منتخب قیادت کے ساتھ والہانہ محبت اور عقیدت کا اظہار کرتے ہوئے فوجی بغاوت کو ناکام بنا دیا ہے جس سے دنیا کو یہ پیغام ملا ہے کہ حقیقی جمہوری قیادت کا کوئی کچھ نہیں بگاڑ سکتا۔ مصر میں عالمی استعمار نے منتخب حکومت کا تختہ گرا کر ثابت کیا ہے کہ وہ اسلامی ممالک میں عوامی قیادت کو آگے آنے کا موقع نہیں دینا چاہتا ۔ وہ دن دور نہیں جب سیسی اپنے عبرت ناک انجام سے دوچار ہوگا اور صدر مرسی دوبارہ اقتدار سنبھالیں گے ۔ پانامہ لیکس کو معمولی معاملہ سمجھنے والے خود فریبی کا شکار ہیں ،عوام کرپشن اور کرپٹ قیادت کو مزید برداشت نہیں کریں گے ۔ملک کے اربوں ڈالر لوٹ کر بیرونی بنکوں میں منتقل کرنے والے قومی مجرم ہیں ،انہیں احتساب کے کٹہرے میں آنا پڑے گا۔موجودہ اور دو سابقہ حکومتوں کا آڈٹ ہوگا اور لٹیروں سے ایک ایک پائی کا حساب لیا جائے گا۔ملک میں غربت ،مہنگائی ،بے روز گاری اور لوڈ شیڈنگ حکمرانوں کی بدیانتی اور کرپشن کی پیداوار ہے ۔الیکشن کمیشن سیاسی وابستگیاں رکھنے والوں کو قبول نہیں کریں گے ۔کشمیر پر حکومت کے ڈانواڈول موقف نے عوام کو مطمئن نہیں کیا ۔جماعت اسلامی خواتین کے حقوق کا تحفظ کرے گی اور انہیں وراثت میں حق دلانے کے ساتھ ساتھ تعلیم ،صحت اور گھریلو دستکاریوں کیلئے بنکوں سے بلاسود قرضے دلائیں گے ۔ان خیالات کا اظہار انہوں نے اسلامی جمعیت طالبات پنجاب کے سالانہ اجتماع ارکان سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔سینیٹر سراج الحق نے کشمیر پر حکومت کے کمزور موقف پر افسوس کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ حکومتی موقف نے پاکستانی عوام کے ساتھ ساتھ کشمیر یوں کو بھی سخت مایوس کیا ہے ۔ایک طرف کشمیری عوام پاکستان کی تکمیل کی جنگ لڑ رہے ہیں اور دوسری طرف پاکستان کے بزدل اور امریکی ڈکٹیشن پر چلنے والے حکمران مودی سے دوستی کے سحر میں مبتلا ہیں ۔انہوں نے کہا کہ ایک ہفتہ کے اندر 45نوجوانوں کو بے دردی سے شہید کردیا گیا ہے ،دوہزار سے زائد زخمیوں کو ہسپتالوں میں علاج کی سہولتیں نہیں دی جارہیں ۔انہوں نے کہا کہ سینکڑوں بچوں اور خواتین کو بھی بھارتی قابض فوج نے بدترین تشدد کا نشانہ بنایا اور انہیں گرفتار کرکے جیلوں میں بند کردیا گیا ہے ،سینکڑوں لوگوں کی آنکھوں کو ربڑ کی گولیوں کا نشانہ بنا کر ان کی بینائی چھین لی ہے ۔انہوں نے کہا کہ بھارت کے تمام تر ریاستی مظالم کے سامنے کشمیری عوام جرأت اور استقامت کا پہاڑ بنے ہوئے ہیں اور عالمی برادری کو پیغام دے رہے ہیں کہ وہ آزادی کے مطالبے سے کسی قیمت پر دستبردار نہیں ہونگے ۔سینیٹر سراج الحق نے کہا کہ الیکشن کمیشن میں غیر جانبدار اور دیانتدار اراکین ہونے چاہیں۔سیاسی وابستگی رکھنے والے اور جانبدار اراکین کو کوئی قبول نہیں کرے گا اور ایسے اراکین کی موجودگی میں شفاف اور غیر جانبدارالیکشن کی امید نہیں کی جاسکتی۔انہوں نے کہا کہ موجودہ اور دو سابقہ حکومتوں کے ادوار میں لوٹی گئی قومی دولت ملک میں واپس آجائے تو عوام کو تعلیم صحت کی مفت سہولتیں مہیا کی جاسکتی ہیں اور ہر طرح کے ٹیکسوں اور مہنگائی کا خاتمہ ہوسکتا ہے ۔اقتدار پر قابض حکمرانوں نے گزشتہ 68سال سے لوٹ مار کا بازار گرم کر رکھا ہے ۔وی آئی پی کلچر ،کرپشن ،بدیانت قیادت اور وسائل کی غیر منصفانہ تقسیم کی وجہ سے عوام زندگی کی بنیادی سہولتوں سے محروم ہیں ۔ ملک سے اربوں ڈالر لوٹنے والوں نے آئی ایم ایف اور ورلڈ بنک سے شرمناک شرائط پر قرضے لیکر قوم کو صیہونی مالیاتی اداروں کا اسیر بنایا اور پھر قرضوں کی ان رقوم کو عوام پر خرچ کرنے کی بجائے اپنے بیرونی اکاؤنٹس میں منتقل کردیا ۔انہوں نے کہا کہ حکومت اور اپوزیشن میں بیٹھے ہوئے کچھ لٹیرے پانامہ ،دبئی اور لندن لیکس کو معمولی قرار دیکر عوام کو گمراہ کرنے کی ناکام کوشش کررہے ہیں ۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں