81

دروش شاہنگار میں پیڈو کے خلاف احتجاج کرنے والوں اور شندور میں ڈیوٹی کیلئے دیگر اضلاع سے چترال آنے والی پولیس کے مابین اُس وقت تصادم

چترال ( محکم الدین ایونی) دروش شاہنگار میں پیڈو کے خلاف احتجاج کرنے والوں اور شندور میں ڈیوٹی کیلئے دیگر اضلاع سے چترال آنے والی پولیس کے مابین اُس وقت تصادم ہوا ۔ جب انتظامیہ کے ساتھ احتجاجیوں کے قائدین کے مذاکرات کا میاب ہونے کے بعد چترال پشاور روڈ کھول دی گئی ۔ جو کہ بدھ کی صبح سے سہ پہر تک آٹھ گھنٹے بند تھی ۔روڈ کھلتے ہی پولیس کا بڑا قافلہ جب چترال روانہ ہوا ۔ تو کئی مقامات پرروڈ پر موجود رکاوٹیں ہٹا دی گئی تھیں ، لیکن شاہنگار کے مقام پر احتجاج کرنے والوں کو اُن کے قائدین کی طرف سے مفاہمت ہونے اور روڈ کے کھولنے سے متعلق ہدایات نہیں دیے گئے تھے ۔ اس پر پولیس جب یہاں پہنچی ،تو احتجاج کرنے والوں اور پولیس کے درمیان روڈ کھولنے سے متعلق تو تو میں میں ہوئی اور نوبت تصادم تک جا پہنچی ۔ تاہم پولیس نے فائرنگ کرکے راستہ کھولنے پر مجبور کردیا ۔ ذرائع کے مطابق اس جھڑپ میں دو افراد زخمی ہوئے ہیں ۔ تاہم ڈی ایس پی دروش ظفر احمد نے فائرنگ سے لا علمی کا اظہار کیا ہے ۔ اور اس واقعے کو غلط فہمی کا نتیجہ قرار دیا ہے ۔

Print Friendly, PDF & Email

اپنا تبصرہ بھیجیں