89

وزیرِ اعلیٰ خیبرپختونخوا بہت جلد بھر پور پیکیج کے ساتھ اپر چترال کا دورہ کرینگے۔کمشنر ملاکنڈ سید ظہیرالاسلام۔

اپرچترال(ذاکر محمد زخمی)کمشنر ملاکنڈ ڈویژن سید ظہیر الاسلام نے اپر چترال کا دورہ کرکے عوامی مسائل سے آگاہی اور لائن ڈیپارٹمنٹ کی کارکردگی جانچنے کے لیے اپر چترال میں دوسری بار کھلی کچہری کا انعقاد کیا جس میں ڈپٹی کمشنر اپر چترال محمدعلی،اے۔ ڈی۔ سی محمد عرفان الدین، ڈی۔ پی۔ او اپر چترال ذوالفقار علی تنولی،لائن ڈیپارٹمنٹ کے سربراہاں کے علاوہ سیاسی شخصیات اور سول سوسائٹی کے افراد نے کثیر تعداد میں شرکت کی۔کھلی کچہری میں موجود عمائدین علاقہ نے درپیش مسائل سے کمشنر ملاکنڈ ڈویژن کو آگاہ کیا۔سابق چیرمین فیض الرحمٰن نے کمشنر ملاکنڈ کو خراج تحسین پیش کرتے ہوئے کہا کہ وہ عہدہ سنبھالنے کے بعد اپر چترال کو ہمیشہ اہمیت دیکر علاقے کے مسائل سے آگاہی حاصل کرکے آن کے حل کرنے میں دلچسپی لیتے ہیں جو ان کی اپر چترال کے عوام کے ساتھ محبت کا ثبوت ہے اور اس بات پر افسوس کا اظہار کیاکہ اپر چترال کے لوگ تمام تر سیاسی وابستگیوں سے بالا تر ہوکر ایک جھنڈے تلے وزیرِ اعلیٰ خیبرپختونخوا محمود خان کے شایان شان استقبال کے لیے بیتاب تھے اور تمام تر تیاریاں مکمل کرنے کے بعد دورے کو منسوخ کرنے سے مایوسی ہوئی۔ساتھ اپر چترال کے مختلف محکموں میں خالی اسامیوں پر غیر مقامی افراد کی تقریری پر اپنے تحفظات کا اظہار کیا۔انہوں نے ڈپٹی کمشنر اپر چترال محمد علی اور لائن ڈیپارٹمنٹ کے جملہ سربراہاں کی تعریف کی کہ وہ نامساعد حالات اور درکار وسائل کی عدم دستیابی کے باوجود اپر چترال کی عوام کو سہولیات پہنچانے کے لیے دن رات کوشان ہیں۔تحریک انصاف کے تہنما اور سابق تحصیل کونسلر سردار حکیم نے اپر چترال کو درپیش چند فوری حل طلب مسائل کمشنر کوپیش کی۔ جن میں اپر چترال کے وہ روڈ جن کے کوئی والی وارث نہیں انہیں سی اینڈ ڈبلیو کے تحویل میں دینے،ڈسٹرکٹ اکاونٹ آفس کو فعال بنانے، بونی پولو گراونڈ میں توسیع کرنے،اپر چترال میں صوبائی بینک خیبربینک کی شاخ کھولنے اور دوسرے مسائل شامل تھے۔کمشنر ملاکنڈ ڈویژن سید ظہیر الاسلام اپنے خطاب میں کہا کہ وزیرِ اعلیٰ خیبرپختونخوا محمود خان اپر چترال کا دورہ کرنے کے فیصلہ کو حتمی شکل دی تھی تاہم اسلام آباد میں بہت ہی ضروری میٹنگ پر انہیں اچانک جانا ضروری ہوا۔اُنہوں نے کہا کہ وزیراعلیٰ نے مجھے ہدایت دی کہ میں اپر چترال جا کر ان کی نمائندگی کروں اور ان کا پیغام آپ تک پہنچاوں اس لیے میں حاضر ہوا ہوں اور وزیر اعلیٰ خیبرپختونخوا محمود خان بہت جلد بھر پور پیکیج کے ساتھ اپر چترال کا تفصیلی دورہ کرینگے۔وزیر اعلیٰ کا پیغام ہے کہ اپر چترال دورہ کرتے وقت جیبیں بھر کرآئینگے اور اپر چترال کو خصوصی ترقیاتی پیکیج دینگے اس لیے آپ کو مایوس ہونے کی قطعاًضرورت نہیں اور انشاء اللہ بہت جلد وزیر اعلیٰ اپر چترال کے دورے پر آئینگے۔کمشنر ملاکنڈنے حل طلب تمام مسائل اپنے ساتھ نوٹ کرتے ہوئے ان پر جلد پیش رفت کرنیکی یقین دہانی کی اور ڈپٹی کمشنر سمیت لائن ڈیپارٹمنٹ کے جملہ سربراہاں کو ہدایت کی کہ وہ عوام کو سہولت پہنچانے کے خاطر ہر دستیاب وسائل بروئے کار لائیں۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں